بلدیہ وسطی،اجمیر نگری کے علاقے میں 15 روز میں 45 شہری 45 گاڑیوں سے اسلحہ کے زور پر محروم ہو گئے

*اسٹریٹ کرائم کا سدباب خواب*

اجمیر نگری کے علاقے میں 15 روز میں 45 شہری

45 گاڑیوں سے اسلحہ کے زور پر محروم ہو گئے

کراچی(کرائم رپورٹر)اجمیر نگری تھانے کی حدود میں اسٹریٹ کرائم کا سدباب تھانیدار نے نا ممکن بنا دیا مذکورہ تھانیدار نے سرجانی کے بعد خواجہ اجمیر نگری تھانے میں آرام کی کرسی جما کر علاقہ عوام کو اسٹریٹ کریمنلز کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا ہے۔رواں ماہ کے دوران 15 روز میں 45 شہری اپنی گاڑیوں سے محروم ہو گئے سی پی ایل سی نے اعداد و شمار جاری کر دئے تفصیلات کے مطابق ضلع وسطی کے علاقے نارتھ کراچی کے مکین موجودہ تھانیدار کی دوران تعیناتی اسٹریٹ کریمنلز کے لئے آسان ہدف بن گئے 15 روز میں اسٹریٹ کریمنلز نے 45 شہریوں سے اسلحہ کے زور پر 45 گاڑیاں چھین لیں جس کے سبب متعلقہ پولیس راہزنی کی وارداتوں پر قابو پانے میں ناکام دکھائی دیتی ہے جبکہ سی پی ایل سی کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق اجمیر نگری پولیس نے 45 راہزنی کی وارداتوں کے با وجود صرف 28 مقدمات درج کئے جبکہ 17 مقدمات پولیس حکام کو کارگردگی رپورٹ بہتر ظاہر کرنے کی غرض سے عتاب کا شکار کر دیے گئے جس کی وجہ سے مقامی افراد غیر محفوظ ہونے کے ساتھ ساتھ چھینی گئی گاڑیوں کی برآمدگی کے خواب سے بھی محروم ہو کر رہ گئے یاد رہے کے نئے تعینات ہونے والے کراچی پولیس چیف نے اسٹریٹ کرائم کے سدباب کیلئے تمام تھانیداروں کو 45 دن کا وقت دیتے ہوئے کہا تھا کہ جس کی کارگردگی بہتر نہیں ہو گی اسے دوبارہ موقع نہیں دیا جائے گا دریں اثنا 40 دن میں تھانیدار اجمیر نگری علاقے میں ہونے والے اسٹریٹ کرائم کا سدباب نہ کر سکے جس کی وجہ سے علاقہ عوام سر شام گھروں میں مقید رہنے پر مجبور ہے اور عدم تحفظ کی زد میں ہے علاقہ عوام نے اجمیر نگری میں اسٹریٹ کرائم کے خوفناک حد تک بڑھنے پر کراچی پولیس چیف کی جانب نظریں جماتے ہوئے قابل افسر کی تعیناتی کی امید لگا لی ہے

Whats-App-Image-2020-08-12-at-19-14-00-1-1
upload pictures to the internet

اپنا تبصرہ بھیجیں